مصنف کا تاریخچہ | Anderson Shaw

Anderson Shaw کے بارے میں

فدوی کو اینڈرسن شا کہتے ہیں، جراتِ تحقیق کا بانی اور اس ❞جراتی تحقیقی❝ خیال کا اصل دماغ، مؤمنین مجھے اِس فساد کی اصل جڑ کہہ سکتے ہیں، فلسفیانہ انداز میں اگر بات کی جائے تو میں ❞جراتِ تحقیق❝ نامی اِس فتنے کی ❞پہلی علت❝ یا ❞علتِ کاملہ❝ ہوں، یوں سمجھیں کہ برِ صغیر کے اردو دان طبقے کے مؤمنین پر مجھ سے بڑی مصیبت آج تک نہیں ٹوٹی، اگر آپ کو اس بات سے اتفاق نہیں ہے تو Stay Tuned آپ کو جلد ہی اس حقیقت کا ادراک ہوجائے گا، میرے بارے میں اس سے زیادہ جاننے کی کوشش نہ کریں کہ یہ ناسوت کے بس کا کام نہیں، بس اتنا جان لیں کہ اگر آپ کو خدا، مذاہب اور ان کی فرسودہ تعلیمات پر شک ہے تو آپ بالکل ٹھیک جگہ پر پہنچے ہیں، جراتِ تحقیق بلاگ اور فورم پر میں نے اور میری ٹیم نے اس موضوع کا مختلف جوانب سے احاطہ کیا ہے اور یہ سلسلہ تا دمِ مرگ جاری رہے گا، لہذا آپ کو چنداں مایوسی نہ ہوگی، اور اگر آپ نے اپنی عقل کی بات سننے کا فیصلہ کر لیا ہے تو یہ جگہ یقیناً راہِ آزادی میں آپ کا پہلا پڑاؤ ثابت ہوگی۔

شریعت یا قانون

December 25, 2016

3 تبصرے

مفتیء زماں جناب حضرت شیخ یوسف القرضاوی فرماتے ہیں کہ شریعت کی شان الگ ہے اور وہ قوانین جو دستور ساز اسمبلیوں میں بنائے جاتے ہیں ان کی بات الگ ہے، وہ سختی سے دستور ساز اسمبلیوں کے بنائے ہوئے قوانین کو مسترد کرتے ہیں کیونکہ وہ انسان کے وضع کردہ ہیں اور سمجھتے ہیں مزید پڑھیں…

مصنف:

سائنس کو بھی مذہب سے الگ کریں

December 4, 2016

تبصرہ کریں

جس طرح سیاست کو مذہب سے الگ رکھنا ضروری ہے اسی طرح سائنس کو بھی مذہب سے الگ رکھنا از بس ضروری ہے، کیونکہ مذاہب پُختہ مُتون پر مشمل ہیں جبکہ علمی دریافتیں اور نظریات ہمیشہ حالتِ تغیر میں رہتے ہیں، مثال کے طور پر زمانہ قدیم میں لوگ سمجھتے تھے کہ سورج زمین کے مزید پڑھیں…

مصنف:

سائنس مذہبی نقطہ نظر سے

November 9, 2016

4 تبصرے

سائنسدانوں کی بھرپور کوشش ہوتی ہے کہ وہ وجود سے متعلق بیشتر سوالات کے حقیقی یا حقیقت سے قریب تر جوابات دے سکیں کیونکہ ان سوالوں کے جوابات کا حصول انسانیت کے لیے ضروری ہے: کائنات کیسے وجود میں آئی؟ زندگی پہلی بار کیسے شروع ہوئی؟ ہم کہاں سے آئے؟ اس مقصد کے حصول کے مزید پڑھیں…

مصنف:

اسلام میں ملائیت کا تسلط

November 4, 2016

ایک تبصرہ

دینِ اسلام کبھی بھی اتنی منافع بخش تجارت نہیں رہا جتنا کہ آج ہے، مولویانِ اسلام نے دین کے نام پر کبھی اتنی دولت نہیں کمائی جتنی کہ آج کما رہے ہیں، مولویوں کے فتاوی کی کبھی اتنی اشد ضرورت نہیں تھی جتنی کہ آج کل ہے، اس کا اندازہ اس بات سے لگایا جاسکتا مزید پڑھیں…

مصنف:

طہ حسین کا اسلامی لبرل ازم

November 1, 2016

تبصرہ کریں

اسلامی لبرل ازم کا مفہوم لبرل ازم کے مخالفین کو اب بہت کھٹکنے لگا ہے جس میں ہمارے خیال میں مسلمانوں کی خلاصی پنہاں ہے، خاص کر اگر ذیل کی باتوں کا خاص خیال رکھا جائے: 1- ہمیں مذہب اور مذہبی شدت پسندوں کے درمیان فرق کرنا ہوگا جنہوں نے ❞اسلامی لبرل ازم❝ کی بھرپور مزید پڑھیں…

مصنف:

خوش آمدید رمضان

June 4, 2016

20 تبصرے

یہ مہینہ مجھے بہت پسند ہے، وجہ بڑی سادہ ہے، یہ سال کا وہ واحد مہینہ ہے جس میں مسلمانوں کی حالت کسی اور مہینے کے مقابلے میں انتہائی قابلِ رحم ہوتی ہے اور مسلمان نشانِ عبرت بنے ہوتے ہیں۔۔ بقول شاعر: دیکھو مجھے جو دیدہء عبرت نگاہ ہو آئیے اس ماہِ مبارک کی حقیقی مزید پڑھیں…

مصنف:

کیا اسلام ناپیدگی کی راہ پر گامژن ہے؟

February 6, 2016

5 تبصرے

تاریخِ انسانی نے کئی مذاہب دیکھے جن کی اکثریت اب ناپید ہوچکی ہے جیسے فرعونی، یونانی، میسوپوٹیمیا اور جزیرہ نما عرب کے بُت پرستانہ مذاہب، یہ ناپیدگی عام طور پر پرانے مذہب کے ملبے پر نئے مذہب کے ظہور کی وجہ سے رونما ہوتی ہے جو سلامتی سے گزرنے کے لیے پرانے مذہب کے کچھ مزید پڑھیں…

مصنف:

اسلام عقل اور زیتون

January 1, 2016

3 تبصرے

عقل ہی وہ اکلوتی امام ہے جس کی اقتدا میں سائنسدانوں اور فلاسفہ نے کائنات کے رازوں کو آشکار کیا ہے، یہی وہ اکلوتی دلیل ہے جس کے ذریعے فلاسفہ نے کسی بھی آسمانی مذہب کی آمد سے قبل فضیلت اور رذیلت کی تعریف بیان کی، زیادہ تر مفکرین کے لیے یہی خدا ہے کیونکہ مزید پڑھیں…

مصنف:

خدا کا ہاتھ یا اتفاق؟!

December 25, 2015

67 تبصرے

ایک چھوٹا سا سوال پیشِ خدمت ہے: وسائل نقل وحمل میں سے کسی ایک کا حادثہ فرض کرتے ہیں جیسے ٹرین، بحری جہاز، بس، گاڑی یا ہوائی جہاز، ایک مسافر اتفاق سے لیٹ ہوجاتا ہے اور اس کے نتیجے میں ممکنہ حادثے سے بچ جاتا ہے، کیا خدا نے اسے جان بوجھ کر بچایا؟ صورتِ مزید پڑھیں…

مصنف:

عورت حجاب اور مساوات

December 6, 2015

ایک تبصرہ

یہ درست نہیں کہ اسلام ہی وہ واحد مذہب ہے جس کے ماننے والے اپنی عورتوں کے لیے حجاب اور دوپٹے کا اہتمام کرتے ہیں۔ یہ روایت میسوپوٹیمیا، سومریوں، بابلیوں، آشوریوں اور قدیم یونان میں بھی پائی جاتی تھی کہ خواتین گھر سے نکلتے وقت سر ڈھانپا کرتی تھیں، سر کو کھلا چھوڑنا ایک کبیرہ مزید پڑھیں…

مصنف:
صفحہ 1 برائے 1412345...10...آخری »